آب پاشی, چاول

پانی کی قلت سے چاول کی کاشت متاثر ہونے کا خدشہ ظاہر

زرعی شعبے میں جدیدٹیکنالوجی اور زرعی پانی کو ضائع ہونے سے روکنے کیلیے اقدامات کا مطالبہ

رائس ایکسپورٹرزایسوسی ایشن آف پاکستان کے سیکریٹری جنرل کاشف رحمن نے کہا ہے کہ رواں مالی سال کے دوران چاول کی برآمدات 2 ارب ڈالر سے بڑھ جائیں گی تاہم حالیہ سیزن میں پانی کی کمی کے باعث چاول کی کاشت کا 7.05 ملین ایکڑ کا ہدف حاصل کرنے میں مسائل کا سامنا ہے جس سے چاول کا 7.2 ملین ٹن کا پیداواری ہدف بھی متاثر ہوگا۔
کاشف رحمن نے کہا کہ چاول زرعی شعبے کی ویلیو ایڈڈ مصنوعات میں 3.1 فیصد جبکہ مجموعی قومی پیداوار (جی ڈی پی) میں 0.6 فیصد کا حصہ دار ہے، چاول کی فی ایکڑپیداوار کے فروغ کے لیے آبی وسائل کی دستیابی سمیت جدید ترین ٹیکنالوجی سے استفادہ کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ زرعی پانی کے ضیاع کو روکنے اور کم پانی سے زیادہ سے زیادہ استفادہ کرنے کے لیے جامع حکمت عملی مرتب کرنے کے اقدامات وقت کی اہم ضرورت ہیں۔

Send this to a friend